65

بلدیاتی ادارے 31 دسمبر کو تحلیل، ایڈمنسٹریٹرز لگانے کی تیاریاں مکمل نئے ایڈمنسٹریٹر سیٹ اپ میں کمشنر کے بجائے ڈپٹی کمشنرز کو اختیارات دینے کا امکان تفصیلات کے مطابق31دسمبر 2021 کو بلدیاتی اداروں کو تحلیل کر کے بیوروکریسی راج

بلدیاتی ادارے 31 دسمبر کو تحلیل، ایڈمنسٹریٹرز لگانے کی تیاریاں مکمل
نئے ایڈمنسٹریٹر سیٹ اپ میں کمشنر کے بجائے ڈپٹی کمشنرز کو اختیارات دینے کا امکان
تفصیلات کے مطابق31دسمبر 2021 کو بلدیاتی اداروں کو تحلیل کر کے بیوروکریسی راج نافذ کر نے کی تیاریاں مکمل۔ پنجاب کے 9 ڈو یژنز میں کمشنرز کے بجائے ڈپٹی کمشنرز کو ایڈمنسٹریٹر لگانے کی تجویز، 2021ایکٹ کے باقاعدہ نفاذ اورعملدر آمد کے لئے ڈپٹی کمشنرز کو بااختیار بنانےکا امکان۔

ذرائع کابینہ کمیٹی کے مطابق کمشنرز کو ایڈمنسٹریٹر کا چارج دینے کا فیصلہ موخر کرنے کی تجویز دی گئی ہے ۔صوبے کے36اضلاع کے ڈپٹی کمشنرز کو ایڈمنسٹریٹر کا چارج تفویض کرنے کی بھی تجویز ہے۔

پنجاب حکومت صوابدیدی اختیار استعمال کر کے ضلعوں کے ایڈمنسٹریٹر لگانے کی مجاز ہے ۔2019میں بلدیاتی اداروں کو تحلیل کر کے کمشنرز کو ایڈمنسٹریٹر کا چارج تفویض کیا گیا۔

2009میں شہباز حکومت نے ڈی سی اوز کو ضلع ناظم کی پاورز دیں۔ موجودہ صورتحال میں بزدار سرکار بھی ڈپٹی کمشنرز کو بڑے ضلعوں کا چارج سونپنے کی پالیسی پر عمل پیرا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں