26

*نواز شریف کو بلٹ پروف گاڑی بھی دینا پڑی تو دیں گے وہ پاکستان آئیں، شہزاد اکبر*

*نواز شریف کو بلٹ پروف گاڑی بھی دینا پڑی تو دیں گے وہ پاکستان آئیں، شہزاد اکبر*

لاہور : وزیراعظم عمران خان کے مشیر برائے احتساب و داخلہ شہزاد اکبر نےکہا ہے کہ نوازشریف بیمار نہیں، تندرست ہیں وہ خود کو عدالت کے سامنے پیش کریں، انہیں واپس لانےکے لیے برطانیہ سے دوبارہ رابطہ کیا ہے۔ لاہور میں میڈیا سے گفتگو کرتے شہزاد اکبر نےکہا کہ نوازشریف بیمارنہیں تندرست ہیں وہ خودکو عدالت کےسامنے پیش کریں، اگر عدالت نوازشریف کو بری کردے تو ہمیں کوئی اعتراض نہیں،

نواز شریف ہمیں بتائیں انہیں کس سے جان کا خطرہ ہے ہم انہیں تحفظ دیں گے، نواز شریف کو بلٹ پروف گاڑی بھی دینا پڑی تو دیں گے وہ پاکستان آئیں۔ شہزاد اکبر نےکہا کہ نواز شریف نےصحت کی بنیاد پر برطانیہ میں قیام کی توسیع کامطالبہ کر رکھا ہے، برطانیہ نوازشریف کو ڈی پورٹ کرے تو ان کے پاس اپیل کا حق ہوگا۔

مشیر برائے احتساب و داخلہ شہزاد اکبر نےکہا کہ نوازشریف کو لانےکے لیے برطانوی حکومت سے دوبارہ رابطہ کیا ہے، ہم نے برطانیہ کو بتا دیا ہےکہ نواز شریف سزایافتہ ہیں، وہ علاج کے لیے وزٹ ویزے پر برطانیہ گئے تھے، برطانوی قانون کے مطابق کوئی شخص وزٹ ویزہ پر 6 ماہ سے زیادہ نہیں رہ سکتا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں