5 مئی 1947 کو محلہ سادات ڈیرہ غازی خان سید چراغ حسین شاہ نقوی کے گھر میں ایک حسین آنکھوں والا بچہ پیدا ہوا۔ اس بچے کا نام والدین نے سید غلام عباس نقوی رکھا۔ گورنمنٹ کالج بوسن روڈ ملتان سے گریجویشن کرنے کے بعد جب یہ نوجوان جامعہ پنجاب کے اردو ڈیپارٹمنت میں داخل ہوا تو دنیا نے اسے محسنؔ نقوی کے نام سے جانا۔

کسی طرح دکان کے اندر لے جانے کی کوشش کی تاکہ ان کو پولیس کے حوالے کیا جاسکے۔ اسی دوران ان عورتوں نے اپنے کپڑے اتارنے شروع کردیے کیونکہ یہ دکھانا چاہ رہی تھیں کہ دکانداروں نے ان پر تشدد بھی کیا اور ان کے کپڑے بھی اتار دیے۔ ویڈیو میں عورت اپنے کپڑے خود اتارتی نظر